Katt gaye darakhat magar
Tauloqe ki baat hy
Baithay rahe zameen pr prinday tamaam Raat.

تیڈے شهر دے لوک سیانڑے ھن
دل دیندے نئیں دل کڈھ گھن دن

ایسا نہیں کہ غم نے بڑھا لی ہو اپنی عمر
موسم خوشی کا وقت سے پہلے گزر گیا..

میں کیا جانوں دُکھ کی قیمت
مجھ کو سارے مفت ملے ہیں

آخر وہ میرے قد کی بھی حد سے گزر گیا
کل شام میں تو اپنے ہی سائے سے ڈر گیا..

جیسے تیسے گزرنے والی کو !!
عمر کہتے ہیں زندگی تو نہیں

I can’t describe how much I need you and miss you.
I look for you in my mind, in my dreams, in the air I breathe.
I want to touch you, feel you, I want to kiss you.
Your energy, your smile – the more I get, the more I need.